مواد فوراً دِکھائیں

مضامین کی فہرست فوراً دِکھائیں

 باب 9

ناصرت میں یسوع کی پرورش

ناصرت میں یسوع کی پرورش

متی 13:‏55،‏ 56 مرقس 6:‏3

  • یوسف اور مریم کے اَور بھی بچے ہوئے

  • یسوع نے بڑھئی کا کام سیکھا

یسوع نے شہر ناصرت میں پرورش پائی جو کہ ایک چھوٹا اور معمولی سا شہر تھا۔‏ یہ شہر،‏ گلیل کے پہاڑی علاقے میں گلیل کی جھیل کے مغرب میں واقع تھا۔‏

جب یسوع تقریباً دو سال کے تھے تو یوسف اور مریم مصر سے ناصرت منتقل ہو گئے۔‏ لگتا ہے کہ اُس وقت یسوع کے بہن بھائی نہیں تھے۔‏ لیکن بعد میں یوسف اور مریم کے چار بیٹے ہوئے جن کے نام یعقوب،‏ یوسف،‏ شمعون اور یہوداہ تھے۔‏ اِس کے علاوہ اُن کی بیٹیاں بھی ہوئیں۔‏ لہٰذا یسوع کے کم از کم چھ چھوٹے بہن بھائی تھے۔‏

یسوع کے اَور بھی رشتےدار تھے۔‏ ہم الیشبع اور اُن کے بیٹے یوحنا کے بارے میں پڑھ چُکے ہیں۔‏ وہ ناصرت سے بہت دُور یہودیہ کے علاقے میں رہتے تھے۔‏ لیکن سَلومی جو شاید مریم کی بہن تھیں،‏ گلیل کے علاقے میں ہی رہتی تھیں۔‏ اُن کے شوہر کا نام زبدی تھا اور اُن کے دو بیٹے تھے جن کے نام یعقوب اور یوحنا تھے۔‏ یہ یسوع کے خالہ‌زاد بھائی تھے۔‏ ہم نہیں جانتے کہ بچپن میں یسوع نے اپنے اِن خالہ‌زاد بھائیوں کے ساتھ کتنا وقت گزارا۔‏ لیکن جب یسوع بڑے ہو گئے تو یہ دونوں بھائی اُن کے ساتھی بن گئے اور اُن کے رسولوں میں شمار ہوئے۔‏

یوسف کو اپنے بیوی بچوں کو پالنے کے لیے بڑی محنت کرنی پڑی۔‏ وہ پیشہ‌ور بڑھئی تھے۔‏ اُنہوں نے یسوع کو اپنے سگے بیٹے کی طرح پالا اِس لیے یسوع ’‏بڑھئی کے بیٹے‘‏ کے طور پر جانے جاتے تھے۔‏ (‏متی 13:‏55‏)‏ یوسف نے یسوع کو بھی بڑھئی کا کام سکھایا۔‏ یسوع نے یہ کام اِتنی اچھی طرح سے سیکھ لیا کہ لوگ اُن کے بارے میں بھی کہتے تھے کہ ”‏یہ .‏ .‏ .‏ بڑھئی ہے۔‏“‏—‏مرقس 6:‏3‏۔‏

 یوسف اور اُن کے گھر والوں کی زندگی میں یہوواہ خدا کی عبادت کو سب سے اہم مقام حاصل تھا۔‏ یوسف اور مریم نے شریعت کے حکم پر عمل کرتے ہوئے ”‏گھر بیٹھے اور راہ چلتے اور لیٹتے اور اُٹھتے وقت“‏ اپنے بچوں کو یہوواہ خدا کے بارے میں سکھایا۔‏ (‏اِستثنا 6:‏6-‏9‏)‏ ناصرت میں یہودیوں کی ایک عبادت‌گاہ تھی۔‏ بِلاشُبہ یوسف باقاعدگی سے اپنے گھر والوں کے ساتھ عبادت‌گاہ میں جایا کرتے تھے۔‏ بعد میں یسوع کے بارے میں کہا گیا کہ وہ ”‏اپنے معمول کے مطابق سبت کے دن عبادت‌گاہ میں گئے۔‏“‏ (‏لُوقا 4:‏16‏)‏ اِس کے علاوہ یوسف اور مریم اپنے بچوں کے ساتھ باقاعدگی سے یہوواہ کی ہیکل میں عبادت کے لیے بھی جاتے تھے جو یروشلیم میں تھی۔‏