مواد فوراً دِکھائیں

مضامین کی فہرست فوراً دِکھائیں

 حصہ 3

آپ مسئلوں کو کیسے حل کر سکتے ہیں؟‏

آپ مسئلوں کو کیسے حل کر سکتے ہیں؟‏

‏”‏آپس میں بڑی محبت رکھو کیونکہ محبت بہت سے گُناہوں پر پردہ ڈال دیتی ہے۔‏“‏—‏1-‏پطرس 4:‏8

شادی کے بعد آپ اور آپ کے جیون‌ساتھی کو مختلف مسائل کا سامنا ہوگا۔‏ بعض مسائل شاید اِس لیے پیدا ہوں کیونکہ آپ دونوں کی سوچ،‏ احساسات اور عادتیں ایک دوسرے سے فرق ہیں جبکہ بعض مسائل شاید آپ کے ساتھ پیش آنے والے واقعات یا دوسرے لوگوں کی وجہ سے پیدا ہوں۔‏

کچھ لوگ ایسے مسائل سے نظریں چراتے ہیں۔‏ لیکن خدا کے کلام میں نصیحت کی گئی ہے کہ ہم اپنے مسئلوں کو حل کرنے کی کوشش کریں۔‏ (‏متی 5:‏23،‏ 24‏)‏ خدا کے کلام کے اصولوں کی مدد سے آپ اپنے مسائل کا بہترین حل نکا‌ل سکتے ہیں۔‏

 1 مسئلے پر بات کریں

خدا کا کلام کیا کہتا ہے؟‏ ‏”‏بولنے کا ایک وقت ہے۔‏“‏ (‏واعظ 3:‏1،‏ 7‏)‏ اپنے مسئلے پر بات کرنے کے لیے وقت نکا‌لیں۔‏ اپنے جیون‌ساتھی کو سچ سچ بتائیں کہ آپ اِس مسئلے کے بارے میں کیسا محسوس کرتے ہیں۔‏ آپ کو ایک دوسرے سے ہمیشہ ’‏سچ بولنا‘‏ چاہیے۔‏ (‏افسیوں 4:‏25‏)‏ اگر آپ کو غصہ آ بھی جائے تو تب بھی جھگڑا نہ کریں۔‏ نرمی سے جواب دینے سے آپ اپنی بات‌چیت کو جھگڑے کی نوبت تک پہنچنے سے روک سکتے ہیں۔‏—‏امثال 26:‏20؛‏ 2-‏تیمتھیس 2:‏24‏۔‏

اگر آپ کسی بات پر متفق نہیں ہیں تو پھر بھی اپنے جیون‌ساتھی کے ساتھ محبت اور احترام سے پیش آئیں۔‏ (‏کلسیوں 4:‏6‏)‏ مسئلے کو حل کرنے میں دیر نہ لگا‌ئیں اور آپس میں بات کرنا بند نہ کریں۔‏—‏افسیوں 4:‏26‏۔‏

آپ کیا کر سکتے ہیں؟‏

  • مسئلے پر بات کرنے کے لیے کوئی مناسب وقت طے کریں۔‏

  • جب آپ کا جیون‌ساتھی بات کر رہا ہو تو اُس کی بات نہ کاٹیں بلکہ اپنی باری کا اِنتظار کریں۔‏

 2 سنیں اور سمجھیں

خدا کا کلام کیا کہتا ہے؟‏ ‏”‏ایک دوسرے کو پیار کرو۔‏ عزت کے رُو سے ایک دوسرے کو بہتر سمجھو۔‏“‏ (‏رومیوں 12:‏10‏)‏ اپنے جیون‌ساتھی کے نقطۂ‌نظر کو سمجھنے کی کوشش کریں۔‏ اِس کے لیے آپ کو ’‏ہمدردی اور فروتنی‘‏ کی ضرورت ہے۔‏ (‏1-‏پطرس 3:‏8؛‏ یعقوب 1:‏19‏)‏ اپنے جیون‌ساتھی کو محض یہ تاثر نہ دیں کہ آپ اُس کی بات سُن رہے ہیں بلکہ پوری توجہ سے اُس کی بات سنیں۔‏ اگر ممکن ہو تو اپنا کام بند کر دیں۔‏ یا پھر اُس سے پوچھیں کہ ”‏کیا ہم بعد میں اِس بارے میں بات کر سکتے ہیں؟‏“‏ اگر آپ اپنے جیون‌ساتھی کو اپنے مخالف کی بجائے اپنا قریبی دوست سمجھیں گے تو آپ ”‏خفا ہونے میں جلدی“‏ نہیں کریں گے۔‏—‏واعظ 7:‏9‏۔‏

آپ کیا کر سکتے ہیں؟‏

  • اپنے جیون‌ساتھی کے نظریے کو سمجھنے کی کوشش کریں،‏ چاہے آپ اُس سے متفق ہوں یا نہیں۔‏

  • یہ اندازہ لگا‌نے کی کوشش کریں کہ آپ کا جیون‌ساتھی اصل میں کیا کہنا چاہ رہا ہے۔‏ اُس کے تاثرات اور لہجے پر بھی غور کریں۔‏

3 اپنے فیصلوں پر عمل کریں

خدا کا کلام کیا کہتا ہے؟‏ ‏”‏ہر طرح کی مشقت میں منافع ہے،‏ لیکن خالی باتیں کرنا غربت تک پہنچاتا ہے۔‏“‏ (‏امثال 14:‏23‏،‏ نیو اُردو بائبل ورشن‏)‏ مسئلے کا اچھا حل نکا‌لنا ہی کافی نہیں ہے بلکہ جو فیصلہ آپ نے کِیا ہے،‏ آپ کو اُس پر عمل بھی کرنا چاہیے۔‏ اِس کے لیے شاید آپ کو سخت کوشش کرنے کی ضرورت ہو لیکن آپ کی محنت ضرور پھل لائے گی۔‏ (‏امثال 10:‏4‏)‏ اگر آپ مل کر اپنے مسئلوں کو سلجھانے کی کوشش کرتے ہیں تو اِس سے آپ کو ”‏بڑا فائدہ“‏ ہوگا۔‏—‏واعظ 4:‏9‏۔‏

آپ کیا کر سکتے ہیں؟‏

  • یہ فیصلہ کریں کہ مسئلے کو حل کرنے کے لیے آپ دونوں میں سے ہر ایک کون‌سے قدم اُٹھائے گا۔‏

  • وقتاًفوقتاً اِس بات کا جائزہ لیں کہ آپ اپنی کوششوں میں کس حد تک کامیاب ہوئے ہیں۔‏